قرنیہ کی بیماریاں

قرنیہ کی بیماریاں

قر نیہ سے آ نکھ کا کو نسا حصہ مرا د ہے؟

آ نکھ میں دو شفّا ف محدّب عد سے ہو تے ہیں جِن کا کام شعا عوں کو آ نکھ کے پر دۂ بصارت پر مُنعکس کر نا ہو تا ہے۔جو عدسہ سب سے با ہر ہو تا ہے اُسے قر نیہ کہتے ہیں۔سامنے سے د یکھنے سے آنکھ کا جو حصہ ر نگدار ﴿برا ؤن، نیلا وغیرہ﴾ نظر آ تا ہے وُہی قرنیہ ہو تا ہے البتّہ یہ رنگ قر نیہ کا نہیں ہو تا بلکہ قر نیہ کے پیچھے وا قع آئرس کا ہو تا ہے۔ قر نیہ چو نکہ بالکل شفّاف ہو تا ہے اِس لئے اِس کا اپنا کو ئی رنگ نہیں ہو تا۔

Normal cornea

قر نیہ کی خرا بی کی صو رت میں قر نیہ کیسا نظر آتا ہے؟ اور اِس کی دیگر کیا علامات ہو تی ہیں؟

تھو ڑا نقص ہو تو آ نکھ کا رنگ ﴿برا ؤن، نیلا وغیرہ﴾ گد لا گدلا نظر آ تا ہے . زیا دہ نقص ہو تو دُودھیا رنگ کا نظر آتا ہے۔ اگر بہت زیا دہ خرا بی پیدا ہو چکی ہو تو قرنیہ بالکل سفید نظر آنا شروع کر دیتا ہے۔ اِسی تنا سب سے نظر بھی کم ہو جا تی ہے۔ اگر زخم یا سو زش بھی مو جُود ہو تو درد ہو تی ہے ، آ نکھ سے پا نی آتا ہے، اور روشنی بر دا شت نہیں ہو تی۔ لیکن پر انی تکلیف کی صورت میں عام طور پر صرف نظر کی کمی اور دیکھنے میں آ نکھ کا سفید ہو نا ہی علا ما ت ہو تی ہیں۔