Watering آنکھوں سے پانی بہنا: وجوہات ، علاج

 

آنکھوں سے پانی کیوں بہتا ہے؟  

اگرچہ آنکھوں میں پانی بہنے کی ایک اہم وجہ آنکھ کے کسی حصہ کی سوزش ہوتی ہے لیکن اگر مسلسل یا اکثر پانی بہتا ہو یہ کیفیت زیادہ تر اُس وقت ہوتی ہے جب آنکھ کو باہر سے صاف کرنے والا پانی جیسا محلول اپنا کام کرنے کے بعد ناک میں جانے میں ناکام ہو جاتا ہے اور چہرے پر بہنا شرع ہو جاتا ہے۔ کیوں ناکام ہوتا ہے اس لئے کہ اُس کی نکا سی کے را ستوں میں رُکا وٹ آ چُکی ہو تی ہے۔

آنکھوں کی صفائی کے بعد فالتو پانی کی نکاسی راستے کونسے ہوتے ہیں اور یہ نظام کیسے کام کرتا ہے؟

آنکھ کے بیرونی حصوں کی صفا ئی اور تحفّظ کے لیے اللہ تعا لٰی نے ایک شاندار نظام بنایا ہے۔ کُچھ غدود Lacrimal glands بنائے ہیں جو پا نی کی طرح کا ایک محلُول بنا تے ہیں۔ دو بڑے غدود پپوٹوں کے نیچے دائیں اور بائیں ہوتے ہیں اور باقی چھوٹے چھوٹے آنکھ کی حفاظتی جِھلّی Conjuctiva کے اندر ہوتے ہیں۔ اِن غدودوں سے نکنے والا محلول آنکھ کی صفائی اور آنکھ کی سطح کو مرطوب رکھنے کا کام کرتا ہے۔ استعمال میں آ جانے اور فضا میں بخارات بن کر اُڑ جانے کے بعد جو کافی جیسا پانی کی طرح کا محلول باقی بچ جاتا ہے وہ نا ک میں چلا جا تا ہے۔ یہی محلول آنسوؤں کی شکل بھی اختیار کرتا ہے۔ آنکھ اور نا ک کو ملا نے اور نکا سی کا کام کر نے والے نظام کو لیکریمل ڈرینیج سسٹم Lacrimal drainage system  کہتے ہیں اِس کے اجزا ذیل کی تصویروں میں آپ دیکھ سکتے ہیں: 

پانی کی نکاسی کے نظام میں خرابی کی علامت صرف پانی بہنا ہی ہوتی ہے یا کوئی اور بھی علامتیں ہوتی ہیں؟ 

جب پانی کی نکاسی کے نظام میں خرابی واقع ہو جاتی ہے تو اُس کی خرابی کی نوعیّت کے مطابق مختلف علامات پیدا ہوتی ہیں۔ کچھ کا ذکر ذیل میں کیا جاتا ہے:

  • اگر را ستہ بند ہو جائے یا اُس کا پانی کو پمپ کرنے کرنے کا نظام کمزور ہو جائے پھر پانی ناک میں جانے کی بجائے چہرے پر بہنے لگتا ہے۔
  • لیکن اگر آ نسووّں کی تھیلی یا راستے کے کسی اور حصے میں انفیکشن بھی ہو جائے تو پھر گندا مواد بننا شروع ہو جاتا ہے اور آنکھوں کے پپوٹے آپس میں جُڑنا شروع ہو جاتے ہیں۔
  • ایسی صورت میں آنکھ کے قریب ناک کے اوپر دبائیں تو پیپ کی طرح کا مواد نکلتا ہے۔ 
  • کئی دفعہ آنکھ کے قریب ناک کے اوپر اُبھار بن جاتا ہے جسے گلٹی بھی کہہ دیتے ہیں۔ یہ گِلٹی بعض اوقات ددر بھی کرنے لگتی ہے۔ اِس کو دابئیں تو پیپ نکلتی ہے۔ ایسی کیفیّت میں اکثر اوقات بخار ہو جاتا ہے۔  
  • یہ پھوڑا بعض لوگوں میں پھٹ جا تا ہے۔ جب یہ مسلسل موجود رہے اور بار بار پھٹتا رہے تو اِسے ناسُور کہا جاتا ہے۔

بیماری کی کُچھ تصاویر

پانی بہنے کا علاج کیا ہو تا ہے؟

چھوٹے بچوں میں

چھوٹے بچوں میں بچوں کی ایک بڑی تعداد ایسی ہو تی جس میں یہ نالی بند ہوتی ہے۔ اِس کے بند ہونے کی وجہ زیادہ تر یہ ہوتی ہے کہ اِس نالی نشوونما ابھی نا مکمل ہوتی ہے اور بڑا ہونے کے ساتھ جس طرح باقی اعضاء مکمل ہوتے ہیں اِسی طرح یہ نالی بھی مکمل ہو جاجی اور خود بخود کُھل جاتی ہے۔ اِن بچوں میں کِسی اپریشن کی ضرورت نہیں ہو تی۔ اس دوران میں اُن کی آنکھوں سے پانی آتا رہتا ہے لیکن اُس کا کوئی نقصان نہیں ہوتا۔ خود بخود ٹھیک ہونے کی عمر ایک سال ہوتی ہے۔ اگر ایک سال تک یہ نالی نہیں کُھلتی تو پھر کبھی بھی خود بخود نہیں کُھلے گی؛ اس کو کھولنے کیلئے اپریشن ضروری ہوتا ہے۔

  • · کئی بچوں کی آنسوؤں کی تھیلی میں انفیکشن ہو جاتی ہے جس سے آنکھ سے گندا مواد بھی خارج ہونے لگتا ہے۔ چنانچہ اگر پانی کے ساتھ ساتھ پیپ بھی آنے لگے تو پھر ایسی کیفیت میں ادویہ کا اِستعمال ضروری ہوتا ہے تاکہ سوزش ٹھیک ہو جائے اور آنسوؤں کی تھیلی میں سوزش کی کیفیت مستقل نہ پیدا ہو نے پائے۔  

  • اگر تھیلی کے اندر مستقل طور پر سوزش رہنے لگے اور دوائیوں سے ٹھیک نہ ہو تو بہتر ہوتا ہے کہ ایک سال کی عمر کا اِنتظار نہ کیا جا ئے۔ اور اپریشن کر دیا جا ئے۔  

  • اِن بچوں کی اکثریت میں چھوٹے اپریشن یعنی Probing سے مسئلہ حل ہو جاتا ہے۔  

  • جِن میں اِس سے مسئلہ حل نہ ہو یا رستہ بند ہو نے کی دیگر وجُوہات میں سے کوئی اور وجہ ہو تو پھر بڑا اپریشن یعنی DCR ضروری ہوتا ہے۔ اور اکثر اوقات اپریشن کے ذریعے ایک نالی ڈال دی جاتی ہے جو کئی مہینے بعد نکالی جاتی ہے۔  

بڑی عمر کے لوگوں میں

بڑی عمر کےلوگوں میں علاج بیماری کی نوعیّت کے مطابق مختلف ہوتا ہے۔ چند صورتیں ذیل میں بیان کی گئی ہیں:

  • ایک بہت بڑی تعداد صرف دوائی کے اِستعمال سے ٹھیک ہو جا تی ہے۔
  • بہت سے لوگوں میں نکاسی کے راستے کے ابتدا ئی حصوں میں رُکاوٹ ہوتی ہے مثلاً لقوہ کے نتیجے میں یا فالج کی دیگر اشکال میں۔ اِن کی آنکھ میں پمپ کرنے کا نظام متأثر ہو جاتا ہے۔ یا نکاسی کی نالی کا منہ آنکھ سے دور رہنے لگتا ہے۔ اِن صورتوں میں متعلقہ سبب کو دُور کرنے سے پانی بہنا رُک جاتا ہے۔ اِن میں سے زیادہ تر کا علاج اپریشن سے کیا جاتا ہے۔  

  • جِن لوگوں میں نالی بند ہو اُن کی بھی ایک بہت بڑی تعداد کا چھوٹے اپریشن یعنی Probing سے مسئلہ حل ہو جاتا ہے۔

  • جِن کا مسئلہ اِن طریقوں سے حل نہ ہواُن کا پھر بڑا اپریشن یعنی DCR ضروری ہوتا ہے۔  

DCR اپریشن کیا ہوتا ہے اور اِس میں اِخراج کی رُکاوٹ دُور کرنے کے لئے کیا طریقہ اختیار کیا جاتا ہے؟

یہ اپریشن کیا ہوتا ہے، کسی آرٹسٹ نے سمجھانے کی کیا خوب کوشش کی ہے۔ دیکھیے اور سمجھنے کی کوشش کیجیے:   

اِس تصویر میں بتایا گیا ہے کہ اِس طرح آنکھ اور ناک کا آپس میں قریبی رشتہ ہوتا ہے۔ اِس مریض کی آنکھ ممکن ہے کینسر کے سبب نکلا دی گئی ہو۔ بہرحال اب ناک اور آنکھ میں اتنا رابطہ ہے کہ انگلی گذر رہی ہے۔ بالکل اِسی طرح DCR اپریشن میں بھی ناک اور آنکھ میں راستہ بنا دیا جاتا ہے۔ یہ قدرتی راستے کا متبادل ہوتا ہے اور پانی آنکھ سے ناک کی طرف جانا شروع ہو جاتا ہے۔ البتّہ یہ مصنوعی راستہ کبھی بھی قدرتی راستے کا نعم البدل نہیں ہو سکتا۔ اِس کے جہاں فوائد ہیں وہاں اِس کی وجہ سے کئی پیچیدگیاں بھی پیدا ہو جاتی ہیں۔ سب سے بڑا مسئلہ تو یہ ہے کہ بہت سارے مریضوں میں وقت کے ساتھ ساتھ یہ راستہ دوبارہ بند ہو جاتا ہے۔ یعنی اِس اپریشن میں ناکامی کا امکان بہت زیادہ ہوتا ہے۔    

اس طریقے سے آنکھ سے خارج ہونے والے فالتو پانی کو سیدھا ناک میں پہنچا دیا جاتا ہے جس سے وہ باہر چہرے پر بہنا بند ہو جاتاہے۔

 

اگرآپ اپنی یا کسے بچے کی آنکھوں سے پانی بہنے کی تکلیف سے متعلق مزید کوئی سوال پوچھنا چاہتے ہوں تو اُس کو کمنٹ کے خانے میں لکھ کر پوسٹ کر دیں انشاءاللہ انہی صفحات میں جواب دینے کی کوشش کی جائے گی۔ اسی طرح اپنی رائے، تبصرہ یا تجویز کو بھی کمنٹ میں لکھ کر پوسٹ کردیں میں بہت ممنون اور مشکور ہوں گا۔

35 Replies to “Watering آنکھوں سے پانی بہنا: وجوہات ، علاج”

  1. السلام علیکم محترم ڈاکٹر صاحب امید کرتا ہوں اپ بفضل خدا خیریت سے ہونگے ڈاکٹر صاحب اج سے تقریبا 12 سال قبل میری انکھوں میں جالا اتا تھا جس کے سبب کتب کا مطالعہ دشوار ہو جاتا تھا مجھے میرے ایک مہربان دوست نے الشفا ائی ٹرسٹ اسلام اباد چیک کروایا تو ڈاکڑ صاحب نے بتایا کہ اپ کی بائیں انکھ کی نظر بچپن سے کمزور ہے اور مجھے بائیں انکھ کا ڈیڈھ نمبر اور دائیں انکھ کا ادھا نمبز کا عینک لکھ کر دیا جو کہ میں نے سستی کرتے ہوے نہیں لگایا اچانک 2017 میں میری انکھوں سے پانی بہنا شروع ہو گیا اور چھوٹے الفاظ پڑھنے سے محروم ہونے پر دوبارہ چیک اپ کروایا تو بائیں انکھ کا چار نمبر اور دائیں انکھ کا پونے دو نمبر کی عینک لگی ہے لیکن میری انکھوں سے پانی انا بند نہیں ہو رہا پلیز میری راہنمائی فرما دیں اللہ کی ذات اپ کو بے حساب اجر عطا فرمائے زیادہ پانی بائیں انکھ سے اتا ہے

    1. وعلیکم السلام جناب آپ کی آنکھوں میں دو علیحدہ علیحدہ مسائل ہیں اِن کو آپس میں گڈمڈ نہ کریں. نظر کی کمزوری علیحدہ مسئلہ ہے اور پانی آنا علیحدہ مسئلہ ہے. اِن دونوں کا سبب مختلف اِس لئے علاج بھی علیحدہ علیحدہ ہونگے.
      آپ درج ذیل لنکس پر کلک کریں اور میرے آرٹیکلز کا مطالعہ کریں آپ مسئلوں کی سمجھ بھی آ جائے گی اور علاج کا آئیڈیا بھی ہو جائے گا.
      http://www.drasifkhokhar.com/refractive-errors-نظر-کی-کمزوری-وجوہات،-علاج/
      http://www.drasifkhokhar.com/watering-آنکھوں-سے-پانی-بہنا-وجوہات-،-علاج/

  2. اسلام و علیکم
    ڈاکٹر صاحب میری آنکھ پہ غلطی سے تھپڑ لگ گیا جس کی وجہ سے تین چار دن درد رہی مگر اب درد تو نہیں ہے مگر کبھی سفید تو کبھی لال رنگ کی روشنی کبھی آنکھ کے نیچے سے اوپر اور کبھی اوپر سے نیچے محسوس ہوتی ہے دائیں آنکھ میں ،جس کی وجہ سے آنکھ بھاری رہتی ہے میں بہت پرشان ہوں کے خدا نخواستہ یہ خطرناک تو نہیں پلیز مجھے جلد بتایئں
    واسلام

  3. عالی جناب ڈاکٹر صاحب میری دائیں آنکھ سے پانی گرنا بندنہیں ہورہا ہے پلیز کوئی حل بتائیں۔

    1. محترم جناب عبدالمالک صاحب السلام علیکم آنکھوں میں پانی آنے کی کوئی ایک وجہ نہیں ہوتی۔ الرجی بھی وجہ ہو سکتی ہے، کوئی مسلسل سوزش بھی وجہ ہو سکتی ہے۔ بہت سارے لوگوں میں آنکھوں کی صفائی اور ناک کی طرف نکاسی کے نظام میں رکاوٹ وجہ ہوتی ہے۔ جب تک وجہ کا تعین نہیں ہوتا اس کا علاج ناممکن ہے۔ اور اس کیلئے معائنہ ضروری ہے، ہو سکتا ہے کوئی ٹیسٹ بھی کروانا ضروری ہو۔ آپ سب سے پہلے میرے درج ذیل دو آرٹیکلز کا معائنہ کریں اور وجہ کے تعین کی کوشش کریں، پھر کسی آئی سپیشلسٹ کو معائنہ کروائیں۔ میرے پاس تشریف لانے کیلئے تفصلات کیلئے نیچے دیئے گئے لنک پر کل کریں:

      http://www.drasifkhokhar.com/contact-us/

      الرجی کے مطالعہ کیلئے:

      http://www.drasifkhokhar.com/eye-allergy-%D8%A2%D9%86%DA%A9%DA%BE%D9%88%DA%BA-%DA%A9%DB%8C-%D8%A7%D9%84%D8%B1%D8%AC%DB%8C-%D9%88%D8%AC%D9%88%DB%81%D8%A7%D8%AA%D8%8C-%D8%B9%D9%84%D8%A7%D8%AC/

      آنکھوں کے نکاسی آب کے نظام میں خرابی کے حوالے سے مطالعہ کیلے:

      http://www.drasifkhokhar.com/watering-%D8%A2%D9%86%DA%A9%DA%BE%D9%88%DA%BA-%D8%B3%DB%92-%D9%BE%D8%A7%D9%86%DB%8C-%D8%A8%DB%81%D9%86%D8%A7-%D9%88%D8%AC%D9%88%DB%81%D8%A7%D8%AA-%D8%8C-%D8%B9%D9%84%D8%A7%D8%AC/

  4. اسلام علیکم ڈاکٹر صاحب میری بیٹی کی آنکھوں سے بہت پانی بہتا ہے خارش بھی ہوتی ہے کھجاتی رہتی ہے وہ ایک آنکھ بھی چھوٹی ہوگئی ہے اسکی اور جب بھی کچھ کھاتی ہے دائیں آنکھ کا اوپر والا پپوٹا اوپر نیچے ہوتا ہے میں بہت پریشان ہوں بچی کی عمر نو سال ہے

    1. وعلیکم السلام آپ کی علامات سے یہی لگتا ہے کہ بچی کی آنکھوں میں سوزش ہے جس کی بہت ساری وجوہات ہوتی ہیں جن کی تشخیص کیلئے آنکھوں کا معائنہ کرنا ضروری ہوتا ہے اگرچہ زیادہ تر الرجی کی وجہ سے اس طرح کی علامات پیدا ہوتی ہیں الرجی کے علاج کے سلسلے میں ضروری معلومات آپ کو میری ویبسائٹ کے مطالعہ سے مل سکتی ہیں لیکن علاج کیلئے آپ کو معائنہ ہی کروانا پڑے گا اپنے قریب کسی آئی سپیشلسٹ کو چیک کروا کر علاج کروائیں
      درج ذیل لنک پر کلک کریں اور مطالعہ فرمائیں
      http://www.drasifkhokhar.com/eye-allergy-آنکھوں-کی-الرجی-وجوہات،-علاج/

    1. السلام علیکم ۔ڈاکٹر صاحب میرا بیٹا جو 4ماہ کا ہے شروع میں اس کی دونوں آنکھوں سے پانی آتا تھا اب ایک تو کافی بہتر ہے جبکہ ایک آنکھ سے ہلکا پانی اور گند ہوتا ہے ۔ہم باربار ٹشو پیپر سے صاف کرتے ہیں ۔دوائی بھی دے رہے ہیں ۔بیچ میں کچھ صحیح ہوئ پھر سے پانی اور گند ہوتا صاف کرتے کرتے اوپر سے لال ہونے لگی ۔پلیز کوئ علاج بتائیں ۔شکریہ ۔

اگر کوئی سوال آپ پوچھنا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں۔ اپنی رائےیا تجویز سے مجھے آگاہ فرمانا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں میں انشاءاللہ جلد از جلد آپ سے رابطہ کروں گا۔

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.