Keratoplasty قرنیہ کی پیوند کاری

آنکھ کے کس حصہ کو قرنیہ کہتے ہیں؟

آ نکھ میں دو شفّاف محدّب عدسے ہوتے ہیں جِن کا کام شعاعوں کو آنکھ کے پردۂ بصارت پر مُنعکس کرنا ہوتا ہے۔ جو عدسہ سب سے باہر ہوتا ہے اُسے قرنیہ کہتے ہیں ۔سامنے سے دیکھنے سے آنکھ کا جو حصہ رنگدار ﴿براؤن، نیلا وغیرہ﴾ نظر آتا ہے اُسی کو قرنیہ کہتے ہیں البتّہ یہ رنگ قرنیہ کا نہیں ہوتا بلکہ قرنیہ کے پیچھے ایک پردہ ہوتا ہے جسے آئرس کہتے ہیں؛ اُس پردے کا رنگ ہوتا ہے۔ قرنیہ چونکہ بالکل شفّاف ہوتا ہے اِس لئے اِس کا اپنا کوئی رنگ نہیں ہوتا۔ جو بھی چیز اِس کے پیچھے ہو گی وہ نظر آئے گی۔ نیچے تصویر میں آنکھ کے مختلف حصے دکھائے گئے ہیں جن خاص طور پر قرنیہ نظر آ رہا ہے۔     

قرنیہ کی خرابی کی صورت میں قرنیہ کیسا نظر آتا ہے؟ اور اِس کی خرابی کی دیگر کونسی علامات ہوتی ہیں؟

قرنیہ اگر تھوڑا خراب ہو تو آ نکھ کا رنگ ﴿برا ؤن، نیلا وغیرہ﴾ گدلا گدلا نظر آتا ہے . اگر کافی زیادہ خراب ہو تو آنکھ دُودھیا رنگ کی نظر آتی ہے۔ اگر بہت ہی زیادہ خرابی پیدا ہو چکی ہو تو قرنیہ بالکل سفید نظر آنا شروع کر دیتا ہے۔ اِسی تنا سب سے نظر بھی کم ہو جا تی ہے۔ اگر زخم یا سوزش بھی موجُود ہو تو درد ہو تی ہے ، آنکھ سے پانی آتا ہے، اور روشنی برداشت نہیں ہوتی۔ تاہم پرانی تکلیف کی صورت میں عام طور پر صرف نظر کم ہوتی ہے اور دیکھنے میں آ نکھ سفید سفید نظر آتی ہے۔ ذیل کی تصاویر میں وہ آنکھیں دکھائی گئی ہیں جن میں قرنیہ خراب ہے۔ 

 

قرنیہ اگر خراب ہو جائے تو کیا یہ صحیح ہو سکتا ہے؟

زیادہ تر مریضوں میں قرنیہ کی خرابی معمولی نوعیت کی ہو تی ہے اور بہت جلد ٹھیک ہو جاتی ہے۔ اِس طرح کی بیماری سے عموماً قرنیہ خراب نہیں ہوتا۔ اگر بر وقت علاج ہو جائے تو قرنیہ کا رنگ خراب نہیں ہو تا یعنی وہ شفاف رہتا ہے۔ تاہم معمولی تکلیف بھی بگڑ جائے تو قرنیہ خراب ہو سکتا ہے اور اگر ایک دفعہ قرنیہ خراب ہو جائے تو پھر اِس کے دوبارہ صحیح ہونے کے اِمکانات ختم ہو جاتے ہیں۔ اُس صورت میں صرف قرنیہ کی پیوند کاری کے ذریعے ہی علاج ہو سکتا ہے۔

قرنیہ کیوں خراب ہو جاتا ہے؟

بعض بیماریاں قرنیہ کو خراب کر دیتی ہیں۔ مثلاً

  • کئی لوگوں کی آنکھوں میں کچرا پڑ جاتا ہے۔ وہ اُسے کسی تجربہ کار ڈاکٹر سے معیاری طریقے سے نہیں نکلواتے اور اپنے تجربے کر کر کے اُن کو نکالتے رہتے ہیں جس سے بہت سے لوگوں کا قرنیہ خراب ہو جاتا ہے۔
  • چو ٹ لگنے سے۔
  • ۔سفید موتیا کے اپریشن کی پیچیدگی کی وجہ سے۔ یہ مسئلہ عام طور پر اُس وقت پیدا ہوتا ہے جب موتیا کا اپریشن بہت لیٹ کر دینے کے باعث بہت زیادہ سخت ہو چکا ہو اور اُسے نکالنے کے لئے بہت زیادہ شعاعیں لگانی پڑیں۔

آنکھ کے عطیہ سے کیا مراد ہے؟ کیا ساری آنکھ بدل دی جاتی ہے؟

نہیں۔ قرنیہ کی پیوند کاری کے دوران ساری آنکھ نہیں تبدیل کی جاتی۔ صرف عطیہ دینے والے انسان کا قرنیہ نکال لیا جاتا ہے اور خراب قرنیہ کو نکال کر اُس کی جگہ پر فٹ کر دیا جاتا ہے۔  

قرنیہ کی پیو ند کاری کا اپریشن کیسے کیا جاتا ہے؟

خراب قرنیہ کا مرکزی حصہ کاٹ کر اُس کی جگہ پر عطیہ شدہ آنکھ کے قرنیہ کا مرکزی حصہ رکھ کر ٹانکوں سے سِی دیا جاتا ہے۔ نیچے کی تصاویر میں قرنیہ کی پیوند کاری کے ایک اپریشن کے مختلف مراحل کو دکھایا گیا ہے۔

 

اگرآپ قرنیہ کی پیوند کاری سے متعلق مزید کوئی سوال پوچھنا چاہتے ہوں تو اُس کو کمنٹ کے خانے میں لکھ کر پوسٹ کر دیں انشاءاللہ انہی صفحات میں جواب دینے کی کوشش کی جائے گی۔ اسی طرح اپنی رائے، تبصرہ یا تجویز کو بھی کمنٹ میں لکھ کر پوسٹ کردیں میں بہت ممنون اور مشکور ہوں گا۔

3 thoughts on “Keratoplasty قرنیہ کی پیوند کاری”

  1. سلام میری انکھ کا قرینہ چوٹ کی وجہ سے خراب ہو گیا ہے نظر آتا ہے مگر روشنی زیادہ کی وجہ صیح نہیں دیکھ سکتا قرینہ سفید نہیں ہوا بلکہ کالا ہی ہے کیا میرا قرینہ ٹھیک ہو سکتا ہے اس کا کتنا خرچہ ہو گا

  2. پاکستان میں آنکھ کی پیوند کہاں ہوتی ہے مہربانی فرما کر رہنمائی کریں جلد از جلد

اگر کوئی سوال آپ پوچھنا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں۔ اپنی رائےیا تجویز سے مجھے آگاہ فرمانا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں میں انشاءاللہ جلد از جلد آپ سے رابطہ کروں گا۔