کیا کبھی کوئی منافق آپ نے دیکھا ہے؟

  • ہمارے تھانے رشوت کا گڑھ ہیں ۔۔۔ مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” رشوت لینے والااور دینے والا دونوں جہنمی ہیں
  • ہماری کچہری میں 200 روپے میں گواہ مل جاتا ہے ۔۔۔ مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” جھوٹی گواہی شرک کے بعد سب سے بڑا گناہ ہے
  • ہماری عدالتوں میں انصاف نیلام ہوتا ہے ۔۔۔۔ مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” لوگوں کے درمیان حق کے مطابق فیصلہ کرو
  • ہماری درسگاہیں جہالت بیچتی ہیں ۔۔۔۔مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” علم حاصل کرو، ماں کی گود سے لیکر قبر کی گود تک
  • ہمارے اسپتال موت بانٹتے ہیں ۔۔۔۔ مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” اور جس نے ایک زندگی بچائی اس نے گویا سارے انسانوں کو بچایا
  • ہمارے بازار جھوٹ ، خیانت ، ملاوٹ کے اڈے ہیں ۔۔۔۔ مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” جس نے ملاوٹ کی وہ ہم میں سے نہیں
  • ہماری مسجدیں ذاتی پراپرٹی ہیں ۔۔۔۔ مگر وہاں لکھا ہوتا ہے ” وان المساجد للہ ۔۔۔ ” ) اور مسجدیں اللہ کی ہیں ۔۔
  • ہر آدمی دوسرے کو صحیح کرنے پر کمر بستہ ہے مگر اس کو اپنا بہت اچھے طریقے سے علم ہے کہ وہ کیا کر رہا ہے ۔
  • ہم جو لکھتے ہیں یہ ہمارا عقیدہ ہے ۔ اور جو کرتے ہیں یہ ہمارا عمل ہے ۔ جب عمل عقیدے کے خلاف ہو تو کیا کہیں اسی کا نام تو منافقت نہیں؟

اگر کوئی سوال آپ پوچھنا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں۔ اپنی رائےیا تجویز سے مجھے آگاہ فرمانا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں میں انشاءاللہ جلد از جلد آپ سے رابطہ کروں گا۔

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.