ایک حقیقت پسندانہ بات

​”سیاسی شعور”

آج تک حسن نثار ٹائپ کے سیکولرز ہمیں امریکہ، برطانیہ اور انڈیا کی مثالیں دے کر چڑایا کرتے تھے کہ دیکھو امریکہ و برطانیہ کی عوام کتنی پڑھی لکھی اور مہذب ہے، ان کا سیاسی شعور کتنا بلند ہے کہ ہمیشہ بہترین فیصلے کرتی ہے، اسی طرح انڈین ابھرتی ہوئی روشن خیال قوم ہیں اور ان کا جمہوری و سیاسی شعور پاکستانیوں سے کتنا بلند اور بہتر ہے کہ آج تک کسی بنیاد پرست اور آمر کو قبول نہیں کیا۔
مگر تھوڑے ہی عرصے میں ان تینوں ممالک نے اپنی اصیلت ظاہر کر دی، سب سے پہلے انڈیا نے اپنے لئے جو نمونہ منتخب کیا جو نہ صرف متعصب اور نفرت گروش ثابت ہوا بلکہ اسلام سمیت دیگر اقلیتوں کی اس حد تک مخالفت میں چلا گیا کہ ملک کا بنیادی کلچر ہی تبدیل کر دیا،  کہ اب تقریبا ساری قوم لٹھ لیئے ایک دوسرے کے پیچھے بھاگ رہی ہے، اپنی فلموں کے ذریعے لبرل تاثر قائم کرنے والے ملک میں فوج کو بھتہ دیئے بغیر فلم ریلیز ہونا ممکن نہیں رہی۔۔ اور جہاں کامیابی کا معیار پاکستان دشمنی بن چکا ہے۔
پھر برطانیہ کے شعور کو اس وقت دیکھا جب یورپین یونین کے حوالے سے ریفرنڈم ہوا، اور پڑھی لکھی قوم نے بڑے پیمانے پر یورپین یونین سے نکلنے کے حق میں ووٹ ڈال دیا، ابھی مکمل رزلٹ بھی نہ شائع ہوا تھا کہ عوام کو شدید بھونگی مارنے کا احساس ہونے لگا اور اپنے ہی فیصلے کے خلاف احتجاج شروع کر دیا۔ 
اور امریکی عوام نے بھی ڈونلڈ ٹرمپ کو منتخب کر کے بتا دیا ہمارے پاس شعور کا لیول کیا ہے، مہذب سپر پاور والی قوم نے ایسے تہذیب یافتہ کو ووٹ دیا جو دیگر خواتین کا تو کیا احترام کرتا اپنی بیوی اور بیٹی کے متعلق بھی بےہودگیوں سے باز نہ آیا، جس نے ملک میں صرف نفرت اور تعب بیچا، قوم کو متحد کرنے کی بجائے گہری تقسیم کا سبب بنا، اخلاقی طور پر کرپٹ ترین اور علمی لیول پر جاہل ترین کو وائٹ ہاوس بھیج کر عوام نے اپنی ذہانت ثابت کر دی۔ 
اب ہمارے ملک کے سیکولر دانشوروں کے پاس ان تینوں ممالک کو رول ماڈل قرار دینے اور اپنی قوم کو بدترین ثابت کرنے کا مزید کیا جواز بچا ہے۔ اس کا یہ مطلب نہیں کہ پاکستانیوں کا سیاسی شعور بہتر ہے اگر بہتر ہوتا تو دو کرپٹ اور نااہل خاندانوں کی غلامی قبول کرتے۔ اس لئے اب جبکہ ہم سب شعور کے ایک ہی لیول پر آن پہنچیں ہیں تو خدارکوئی اب ان ممالک کی عظمت کا منجھن ہمیں نہ بیچے۔ بس اپنی اصلاح پر توجہ دیں، آنے والا وقت بھیانک تصوریر کشی کر رہا ہے۔کیونکہ ہم سب نے دنیا کی قیادت نااہلوں کے سپرد کر دی ہے۔

(شہزاداسلم مرزا)

اگر کوئی سوال آپ پوچھنا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں۔ اپنی رائےیا تجویز سے مجھے آگاہ فرمانا چاہیں تو یہاں لکھ کر پوسٹ کر دیں میں انشاءاللہ جلد از جلد آپ سے رابطہ کروں گا۔

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.